16 Aug, 2018 | 4 Zulhijjah, 1439 AH

as salaamuwalaikum wr wb, Qaza namazon ki niyyat kaise karen agar yaad naa ho k kitni chootein hain Aur kab chootein hain

قضا نمازوں کی نیت کیسے کریں جبکہ معلوم نہ ہو کہ کتنی چھوٹی ہیں اور کب چھوٹی ہیں ؟

الجواب حامدا ومصلیا

جب سے آپ بالغ ہوئے ہیں، غور و فکر کر کے  محتاط حساب لگائیں   کہ اس وقت سے  اب تک کتنی نمازیں آپ نے نہیں پڑھیں۔ جس تعداد پر دل مطمئن ہوجائے  اس کی قضا کرلی جائے۔ اور قضا نماز پڑھتے وقت نیت  اس طرح کی جائے گی کہ فجر کی جتنی نمازوں کی قضا میرے ذمہ میں ہے، ان میں سے  سب سے پہلی کی قضا کرتا ہوں، یاظہر کی جتنی نمازیں میرے ذمہ میں ہیں، ان میں سے سب سے پہلی  کی قضا کرتا ہوں۔ اسی طرح جس نماز کی قضا کرنا چاہتے ہوں  اس کا اسی طرح نام لے  کرقضا پڑھیں۔

  یہ بھی واضح رہے کہ قضا صرف فرض نمازوں اور وتر کی پڑھی جاتی ہے، سنتوں کی قضا نہیں ہوتی۔

الدر المختار وحاشية ابن عابدين (رد المحتار) (2/ 76)

كثرت الفوائت نوى أول ظهر عليه أو آخره.

(قوله كثرت الفوائت إلخ) مثاله: لو فاته صلاة الخميس والجمعة والسبت فإذا قضاها لا بد من التعيين لأن فجر الخميس مثلا غير فجر الجمعة، فإن أراد تسهيل الأمر، يقول أول فجر مثلا، فإنه إذا صلاه يصير ما يليه أولا أو يقول آخر فجر، فإن ما قبله يصير آخرا، ولا يضره عكس الترتيب لسقوطه بكثرة الفوائت.

   واللہ اعلم بالصواب

      احقرمحمد ابوبکر صدیق  غفراللہ لہ

  دارالافتاء ، معہد الفقیر الاسلامی، جھنگ

۲۲؍صفر المظفر؍۱۴۳۹ھ

                 ۱۲؍نومبر؍۲۰۱۷ء